وزیر اعظم عمران خان کی زیر صدارت قومی ٹاسک فورس برائے انسداد پولیو کا اجلاس۔

June 07, 2021

اجلاس میں گورنر خیبر پختونخوا شاہ فرمان، وزراء اعلی سردار عثمان بزدار، سید مراد علی شاہ، محمود خان، محمد خالد خورشید، معاونین خصوصی ڈاکٹر فیصل سلطان، ڈاکٹر شہباز گل، انجنیئر ان چیف پاکستان آرمی لیفٹننٹ جنرل معظم اعجاز، صوبائی چیف سیکریٹریز، وزارت صحت اور بین الاقوامی اداروں کے نمائندے شریک۔

 

اجلاس کو بتایا گیا کہ وفاقی اور صوبائی حکومتوں کی موثر حکمت عملی کی بدولت اب تک اس سال پورے ملک میں بلوچستان سے صرف ایک پولیو کیس رپورٹ ہوا ہے۔ کرونا وباء کی وجہ سے انسداد پولیو مہم سست روی کا شکار ہوئی۔ 

 

اجلاس کو آگاہ کیا گیا کہ پنجاب، سندھ اور خیبر پختونخوا کے کئی اضلاع میں ابھی بھی پولیو وائرس کی موجودگی کے شواہد ملے ہیں۔ یہ بتایا گیا کہ رسائی، سیکیورٹی اور والدین کے عدم تعاون کی وجوہات کی بنا پر ہر مہم میں کثیر تعداد میں بچے پولیو قطروں سے محروم رہ جاتے ہیں۔

 

اجلاس کو بتایا گیا کہ انفارمیشن ٹیکنالوجی کا بھر پور استعمال کیا جا رہا ہے جس میں جغرافیائی انفارمیشن سسٹم اور ٹریکنگ بروئے کار لائے جا رہے ہیں۔ 

 

بل و ملیینڈا گیٹس فاونڈیشن کے پولیو نگرانی بورڈ کے صدر ڈاکٹر کرس ایلیس نے حکومت پاکستان اور وزیر اعظم کو انسداد پولیو مہم میں اہم سنگ میل عبور کرنے پر خراج تحسین پیش کیا۔ 

 

صوبائی وزراء اعلی نے اپنے متعلقہ صوبوں میں انسداد پولیو کے اقدامات کے حوالے سے آگاہ کیا۔

 

وزیر اعظم عمران خان نے صوبائی حکومتوں اور انسداد پولیو مہم میں شریک تمام شراکت داروں کو خصوصی مبارکباد دی۔

 

وزیر اعظم نے کہا کہ پورے ملک میں صرف ایک کیس کا رپورٹ ہونا اہم کامیابی ہے تاہم ہمارا مشن پاکستان کو پولیو سے مکمل نجات دلانا ہے۔ 

 

وزیر اعظم نے اس بات پر زور دیا کہ وفاقی اور صوبائی حکومتوں کی مربوط اور مشترکہ کوششوں سے ہی پاکستان کو پولیو فری بنایا جا سکتا ہے۔

 

وزیر اعظم نے کہا کہ کرونا وباء کے دوران ہماری حکومت نے انسانی جانوں کے تحفظ کے ساتھ ساتھ معاشی استحکام کو بھی برقرار رکھا جس کی دنیا معترف ہے۔ اسی جز بے سے ہم نے پولیو کو بھی شکست دینی ہے۔

 

 

وزیر اعظم نے تمام بین الاقوامی اداروں بشمول ورلڈ ہیلتھ آرگنائزیشن، روٹری انٹرنیشنل اور بل اینڈ ملینڈا گیٹس فاونڈیشن کا پاکستان کو تکنیکی اور مالی معاونت فراہم کرنے پر شکریہ ادا کیا۔ 

 

وزیر اعظم نے بچوں کو پولیو ویکسین کے قطرے پلا کر انسداد پولیو مہم کا آغاز کیا۔