وزیر اعظم عمران خان کی زیر صدارت مختلف سرکاری اداروں اور املاک کی نجکاری کے عمل میں پیش رفت کے حوالے سے جائزہ اجلاس

March 04, 2020

 
وزیر اعظم عمران خان کی زیر صدارت مختلف سرکاری اداروں اور املاک کی نجکاری کے عمل میں پیش رفت کے حوالے سے جائزہ اجلاس

اجلاس میں  وزیرِ منصوبہ بندی اسد عمر، وزیر برائے نجکاری میاں محمد سومرو، مشیر خزانہ ڈاکٹر عبدالحفیظ شیخ، مشیر تجارت  عبدالرزاق داؤد، مشیر اصلاحات ڈاکٹر عشرت حسین، معاون خصوصی برائے اطلاعات ڈاکٹر فردوس عاشق اعوان ، سیکرٹری نجکاری ڈویژن اوردیگر سینئر افسران شریک

سیکرٹری نجکاری ڈویژن نے وزیرِ اعظم کو  مختلف سرکاری اداروں اور املاک کی نجکاری کے حوالے سے اب تک کی پیش رفت سے آگاہ کیا۔

اجلاس میں بتایا گیا کہ اس سال سات ادارے اور املاک کی نجکاری کا عمل مکمل کر لیا جائے گا۔ ان میں دو آر ایل این جی پاور پلانٹس، ایس ایم ای بنک ، سروسز انٹرنیشنل ہوٹل لاہور، جناح کنوینشن سنٹر اسلام آباد اور 27  سرکاری اراضیوں کی نجکاری  وغیرہ شامل ہے۔

وزیرِ اعظم کو بتایا گیا کہ  یہ سات ٹرانزیکشنز مئی اور جون  کے مہینوں تک مکمل کر لی جائیں گی۔

وزیرِ اعظم نے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ غیر منافع بخش   اداروں اور غیر استعمال شدہ املاک کی نجکاری قومی مفاد میں ہے کیونکہ جہاں اس سے  قومی خزانے پر پڑنے والے بوجھ میں کمی آئے گی وہاں سماجی  شعبے و دیگر عوامی فلاحی ترقیاتی منصوبوں کے لئے مالی وسائل میسر آئیں گے۔

وزیرِ اعظم نے ہدایت کی کہ نجکاری کا عمل مقررہ ٹائم لائنز میں مکمل کرنے کی ہر ممکنہ کوشش کی جائے۔ انہوں نے کہا کہ اس ضمن میں بین الوزارتی  کوارڈینیشن  کو مزید بہتر بنایا جائے تاکہ حل طلب معاملات پر فوری ایکشن لیکر تمام
 
رکاوٹوں کو دور کیا جا سکے۔