وزیر اعظم عمران خان کی تمام وفاقی وازرتوں کے سیکریٹریز اور صوبائی چیف سیکریٹری صاحبان سے ملاقات

November 05, 2019

 

اسلام آباد 5 نومبر 2019

وزیر اعظم عمران خان کی تمام وفاقی وازرتوں کے سیکریٹریز اور صوبائی چیف سیکریٹری صاحبان سے ملاقات
اجلاس میں مشیر برائے ادارہ جاتی اصلاحات ڈاکٹر عشرت حسین،  مشیر برائے اسٹیبلشمنٹ شہزاد ارباب،  معاون خصوصی شہزاد اکبر بھی موجود۔
سیکرٹری صاحبان نے ادارہ جاتی کارکردگی کو بہتر بنانے کے لیے تجاویز پیش کیں۔

وزیر اعظم کی گفتگو کے نکات :--
حکومت سنبھالتے ہی آپ سے ملاقات کی تھی  جس کا مقصد  حکومت  کے اصلاحاتی ایجنڈے اور ویژن کو عملی جامہ پہنانے  کے سلسلے میں ایک لائحہ عمل تشکیل دینا تھا۔ ملاقاتوں  کا یہ تسلسل جاری رہے گا ۔

- اس وقت ملک کے معاشی حالات بہتری کی طرف جارہے ہیں۔  سرمایہ کار مختلف شعبوں میں دلچسپی کا اظہار کر رہے ہیں۔ روپے کی قدر بہتر ہورہی ہے۔ برآمدات بڑھ رہی ہیں۔ سرمایہ کاروں کی جانب سے حکومتی پالیسیوں  اور اب تک اٹھائے جانے والے اقدامات پر اعتماد نہایت حوصلہ افزا ہے۔ اس تبدیلی کا اعتراف بین الاقوامی اداروں کی جانب سے بھی کیا گیا ہے۔  اس فضا کو مزید بہتر کرنے کی ضرورت ہے۔

پی ٹی آئی حکومت کا سب سے بڑا چیلنج اسٹیٹس کو تبدیل کرنا ہے۔ نیا پاکستان پرانے اور روایتی طریقوں سے نہیں چلایا جا سکتا۔ تبدیلی کے خواب کو عملی جامہ پہنانے کے لئے  روایتی طریقوں کو خیر آباد کہہ کر عوام کی فلاح کو مقدم رکھنا ہوگا  

نوجوان طبقے کے لیے روزگار کے مواقع پیدا کرنا اور غربت کا خاتمہ ہمارا مشن ہے۔

- پاکستان میں سیاحت کا بہت پوٹینشل ہے جو ملک کی معاشی و سماجی ترقی میں اہم کردار ادا کرسکتا ہے۔ اس پوٹینشل سے  مکمل طور پر استفادہ کرنے کی ضرورت ہے۔

سی پیک پاکستان کے لئے گیم چینجر ثابت ہوگا۔ سی پیک منصوبوں سے پاکستان میں ترقی کا ایک نیا باب روشن ہوگا۔
حکومت کو سول سرونٹس کی مشکلات کا اندازہ ہے۔ ان مشکلات کو دور کرنے اور سول سروس کو ماضی کی  طرح فعال بنانے کے لئے تمام  ممکنہ اقدامات اٹھائے جا رہے ہیں۔
- سیکریٹریز کی تعیناتی کی مدت کی پالیسی  وضع کر دی گئی تاکہ آپ  دل جمعی اور یکسو ئی سے اپنے اپنے متعلقہ محکموں میں اپنی خدمات سرانجام دے سکیں۔
قابل ، پرعزم اور محنتی سول سروس حکومت کے ویژن کو عملی  شکل دینے میں کلیدی کردار ادا کرتی ہے۔
آپ عوامی فلاح و بہبود اور ترقی کے لیے محنت کریں اور مسائل کا حل نکالیں۔
ترقی تب ہی ممکن ہے جب صحیح اور بروقت فیصلے لیے جائیں۔
ایک ایسی حکومت کے دور میں جو سرکاری ملازموں پرکسی قسم کا سیاسی دباؤ نہ  ڈالنے پر یقین رکھتی ہے وہاں آپ کے لئے اپنی بھرپور صلاحیتوں کو برؤے کار لانے اور قوم کی خدمت کرنے کا بہترین موقع ہے۔
 - گورننس میں شفافیت اور جدت لانے کے لیے ٹیکنالوجی کو برؤے کار لایا جائے
مشیر برائے ادارہ جاتی اصلاحات نے سول سروس ریفارمز کے حوالے سے بھی اجلاس کو بریف کیا۔ وزیرِ اعظم نے ہدایت کی کہ ان سفارشات کو حتمی شکل دینے کا عمل جلد مکمل کیا جائے تاکہ سول سروس کی کارکردگی میں بہتری لائی جا سکے