وزیر اعظم عمران خان کو سندھ انفراسٹرکچر ڈیویلپمنٹ کمپنی لیمیٹڈ (SIDCL)

October 21, 2019

 

کی کراچی میں وفاقی حکومت کی طرف سے جاری منصوبوں پر پیش رفت کے حوالے سے بریفنگ۔

بریفنگ میں گورنر سندھ عمران اسمعیل ، وفاقی وزیر پارلیمانی آمور آعظم خان سواتی، وزیر منصوبہ بندی مخدوم خسرو بختیار، وزیر بحری امور سید علی ذیدی،  وزیر آبی وسائل فیصل واوڈا،  معاون خصوصی ندیم بابر، ممبر قومی اسمبلی اسد عمر، ممبران سندھ اسمبلی فردوس شمیم نقوی، حلیم عادل شیخ، مئیر کراچی وسیم اختر، چیف سیکریٹری سندھ سید ممتاز علی شاہ،  SIDCL بورڈ کے چیرمین ثمر علی خان،  CEO SIDCL صالح احمد فاروقی اور سینیر افسران موجود۔

وزیر اعظم کو وفاق کی طرف سے جاری کراچی پیکیج میں شامل منصوبوں کی پیش رفت سے آگاہ کیا گیا۔

وزیر اعظم نے کہا کہ کراچی کے عوام کو درپیش مسائل کے حل کے لیے وفاقی حکومت ہر ممکن کوشش کر رہی ہے۔

جو کام صوبائی حکومت کی ذمہ داری تھی، ان کا بیڑہ بھی وفاقی حکومت نے اٹھا لیا ہے۔  بد قسمتی سے کرپشن کی وجہ سے صوبے کے عوام صاف پانی،  صحت اور تعلیم جیسے بنیادی ضروریات سے بھی محروم رہے ہیں۔ وزیر آعظم


وزیر اعظم نے کراچی پیکیج میں شامل منصوبوں پر کام کی رفتار تیز کرنے کی ہدایت کی