وزیرِ اعظم عمران خان کی زیر صدارت نیا پاکستان ہاؤسنگ منصوبے کے تحت وفاقی دارالحکومت میں مختلف منصوبوں کے حوالے سے اعلیٰ سطحی اجلاس

September 04, 2019

 
اسلام آباد،  04ستمبر2019:
٭ وزیرِ اعظم عمران خان کی زیر صدارت نیا پاکستان ہاؤسنگ منصوبے کے تحت وفاقی دارالحکومت میں مختلف منصوبوں کے حوالے سے اعلیٰ سطحی اجلاس
 ٭  اجلاس میں معاون خصوصی سید ذوالفقار عباس بخاری، معاون خصوصی ندیم افضل چن، گورنر اسٹیٹ بنک رضا باقر، سیکرٹری ہاؤسنگ ڈاکٹر عمران زیب،  چئیرمین نیا پاکستان ہاؤسنگ اتھارٹی لیفٹیننٹ جنرل (ر) انور علی حیدر، چئیرمین سی ڈی اے عامر احمد علی  اور دیگر سینئر افسران کی شرکت
٭ وزیرِ اعظم کو نیا پاکستان ہاؤسنگ منصوبے اور سرکاری زمین کو موثر طریقے سے برؤے کار لانے کی حکومتی پالیسی کے تحت وفاقی دارالحکومت میں کمرشل، رہائش و کاروباری سرگرمیوں کے لئے کثیر المنزلہ عمارات کی تعمیر کے حوالے سے مجوزہ منصوبوں پر تفصیلی بریفنگ
٭ سیکرٹری ہاؤسنگ ڈاکٹر عمران زیب نے وزیرِ اعظم کو بتایا گیا کہ وفاقی دارالحکومت کے  جی 13  سیکٹر میں واقع 45ایکٹر ا کی بیش قیمت راضی کمرشل، کاروباری سرگرمیوں اور رہائش کی ضروریات پورا کرنے کے لئے میسر ہے جس پر کثیر المنزلہ عمارات کی تعمیر کی جا سکتی ہے اور اس مقصد کے لئے مقامی و غیر ملکی سرمایہ کاروں کو  دعوت دی جا سکتی ہے۔
٭ اجلاس میں وفاقی دارالحکومت  اور ملک کے دیگر بڑے شہروں میں  ہاؤسنگ سے متعلق مختلف منصوبوں کے بارے میں تبادلہ خیال
٭ سیکرٹری ہاؤسنگ ڈاکٹر عمران زیب نے قصر ناز کراچی، چمبہ ہاؤس لاہور اور کشمیر پوائنٹ پر واقع سرکاری اراضی کو برؤے کار لانے کے حوالے سے مستقبل کے مجوزہ لائحہ عمل کے حوالے سے بھی وزیرِ اعظم کو بریفنگ دی
٭ وزیرِ اعظم نے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ نیا پاکستان ہاؤسنگ منصوبہ موجودہ حکومت کا سب سے اہم منصوبہ ہے جس سے نہ صرف رہائش اور گھروں کی کمی کو پورا کرنے میں مدد ملے گی بلکہ اس سے معاشی سرگرمیوں میں تیز ی آئے گی۔
٭ وزیرِ اعظم نے کہا کہ ہاؤسنگ اور کنسٹرکشن کے شعبے میں سرمایہ کاروں کو ہر ممکن سہولیات اور مراعات فراہم کی جائیں گی تاکہ تعمیرات کے شعبے کو فروغ ملے