وزیر اعظم عمران خان کو صوبہ پنجاب میں سیاحت کے فروغ کے حوالے سے بریفنگ۔ 

March 09, 2019


وزیر اعظم عمران خان کو صوبہ پنجاب میں سیاحت کے فروغ کے حوالے سے بریفنگ۔ 
صوبہ پنجاب کی پہلی سیاحت پالیسی کا مسودہ کابینہ میں پیش کیے جانے کے لیے تیار ہے۔
صوبے بھر میں آٹھ نئے سیاحتی مقامات کی نشاندہی کی جا چکی ہے 
سرکاری گیسٹ ہاؤسز کو تبدیل کرنے اور انکوسیاحوں کے لئے رہائشگاہ بنانے کے حوالے اقدامات میں پیش رفت ہوئی ہے۔ محکمہ جنگلات اور آبپاشی کے ستر (70) ریسٹ ہاوسز کو عوام کے لیے کھولا جا رہا ہے۔ بریفنگ۔ 
ثقافتی، تاریخی ،مذہبی اور یوتھ ایڈونچر ٹورازم، آن لائن بکنگ اور سوشل میڈیا پورٹل کے حوالے نئے اقدامات پر بھی بریفنگ
کوٹلی ستیاں، چکوال، کوہ سلیمان، اٹک، کالا باغ، خوشاب، بہاولپور اور جہلم میں نئے سیاحتی مقامات کے حوالے سے بریفنگ۔ 
وزیراعظم عمران خان نے مذہبی اور ثقافتی سیاحت ، خصوصا کرتارپور راہداری کے تناظر میں، ٹورازم کے پوٹینشل اور اہمیت کو اجاگر کیا اور اس ضمن میں خصوصی اقدامات کی ہدایت کی۔ 
وزیر اعظم نے ماحولیاتی تحفظ کے لیے اقدامات اور انفراسٹرکچر کی تعمیر کے حوالے سے اقدامات لینے کی بھی ہدایت کی۔ 
وزیر اعظم نے نیشنل پارکس کے تحفظ، ایکو ٹورازم کی اہمیت، جنگلات اور نیشنل پارکس میں قبضہ مافیا کے خلاف ایکشن کے حوالے سے بھی ہدایات دیں۔ 
ماحولیاتی تبدیلی ایک حقیقت ہے۔ ہمیں نیشنل پارکس بنانے پر خصوصی توجہ کی ضرورت ہے۔ ملک میں سیاحت فروغ پا رہی ہے 
Tourism in Pakistan is exploding,۔
غیر ملکی سیاحوں کی پاکستان میں سیاحت کے حوالے سے دلچسپی بڑھتی جا رہی ہے۔ 
سیاحت کے فروغ سے مقامی لوگوں کو روزگار میسر ہو گا، سرمایہ کاری میں اضافہ ہوگا، دور افتادہ علاقے ترقی کریں گے۔ 
وزیر اعظم نے تاریخی ورثے اور مقامات کی تزئین اور دیکھ بھال ( renovation and preservation)کے حوالے سے بھی خصوصی ہدایات دیں۔ 

وزیر اعظم کو صوبہ پنجاب میں سیاحت کے حوالے سے نئے اقدامات اور روڈ میپ کے حوالے سے بھی بریف کیا گیا۔ جن میں ڈیزرٹ سفاری اور چکوال فور بائی فور ریلی شامل ہیں۔ 
وزیراعظم نے تاریخی و ثقافتی مقامات کی تزئین و آرائش کے حوالے سے وسائل کی دستیابی کے حوالے سے اقدامات کے لیے بھی مختلف ہدایات جاری کیں۔