مخصوص افراد کے لیے حکومت کی جانب سے اٹھائے جانے والے مختلف اقدامات پر مکمل طور عمل درآمد کو یقینی بنانے کے لیے لائحہ عمل/سفارشات مرتب کرنے کی ہدایت

December 21, 2018

وزیر اعظم عمران خان کی تمام وزارتوں ، ڈویژنز اور صوبائی حکومتوں کو مخصوص افراد کے لیے حکومت کی جانب سے اٹھائے جانے والے مختلف اقدامات پر مکمل طور عمل درآمد کو یقینی بنانے کے لیے لائحہ عمل/سفارشات  مرتب کرنے کی ہدایت 
 
 حتمی سفارشات و تفصیلی لائحہ عمل آئندہ چار ہفتوں میں پیش کرنے کی ہدایت 
 
 معذور افراد کے لیے دو فیصد کوٹہ پر عملدرآمد  کے لیے لائحہ عمل کی ذمہ داری اسٹیبلشمنٹ ڈویژن اور صوبائی حکومتوں کو دی گئی ہے۔ 
 
 دیکھنے میں آیا ہے کہ ملازمتوں کے لیے دیے جانے والے اشتہارات میں دو فیصد کوٹہ مخصوص افراد کے لیے بھی رکھا جاتا ہے تاہم اسامیوں کی تعداد کے باعث دو فیصد کوٹے پر مخصوص افراد کی بھرتی نہ ہونے کے برابر ہوتی ہے۔ دو فیصد کوٹہ کا استعمال وزارت ڈویژن کی کل افرادی قوت کی بنیاد پر کیا جانا چاہیے: وزیر اعظم آفس کا مراسلہ
 
 متاثرہ سماعت کے حامل افراد کو بین الاقوامی طور طریقوں اور ضابطے کے مطابق ڈرائیونگ لائسنس کے اجرا کے حوالے سے سفارشات اور اقدامات  کی ذمہ داری وزارت داخلہ اور صوبائی حکومتوں کو دی گئی ہے 
 
 جسمانی طور پر معذور افراد کو مفت وہیل چیئر کی فراہمی پر عملدرآمد کے لیے لائحہ عمل کی ذمہ داری وزارت قومی صحت اور صوبائی حکومتوں کو دی گئی ہے 
 
 بصارت سے محروم افراد کو سفید چھڑی مہیا کرنے کی حوالے سے اقدامات کی ذمہ داری بھی وزارت قومی صحت اور صوبائی حکومتوں کو دی گئی ہے 
 
 مخصوص افراد کو ہیلتھ کارڈ کی فراہمی پر عملدرآمد  کے لیے اقدامات و لائحہ عمل کی ذمہ داری وزارت  قومی صحت اور صوبائی حکومتوں کو دی گئی ہے
 
 مخصوص افراد کو گھروں کی فراہمی کے لیے اقدامات و سفارشات کی ذمہ داری وزارت ہاؤسنگ کو دی گئی ہے 
 
 تمام متعلقہ وزارتیں/ڈویژنز اور صوبائی حکومتیں چار ہفتوں میں لائحہ عمل اور سفارشات اسٹیبلشمنٹ ڈویژن کے ذریعے وزیر اعظم آفس کو بھجوائیں گے